کھل جا سِم سِم

برداشت ایک طلسماتی طاقت۰۰۰۰۰ایک دیومالائی جذبہ۰۰۰۰۰۰اک ایسا جادو جو ہمیشہ سر چھڑ کر بولتا ہے۰۰۰۰۰ایک ایسامنتر جو کھل جا سِم سِم کی طرح ہمارے لئیے محبتوں اور چاہتوں کے دروازے کھول دیتا ہے۰۰۰۰۰۰ہمارے تمام مسائل اور مشکلات کا حل۰۰۰۰۰ایک ایسا ہنر جس سے بڑے بڑے سورماؤں کو رام کیا جا سکتا ہے۰۰۰۰۰۰
برداشت ہی دراصل وہ “دھاگہ” ہے جس نے تمام رشتوں اور ناتوں کو محبت کی مالا کا روپ دے رکھا ہے۰۰۰۰۰
دھاگہ نہ ہو تو مالا کا ہر ایک موتی الگ الگ۰۰۰۰۰اپنے آپ میں مست اور دوسرے موتیوں سے لاتعلق۰۰۰۰۰۰
جہاں برداشت نہ ہو ،وہاں سب کچھ بھسم۰۰۰۰۰یہاں تک کہ خون اور پیار کے رشتے بھی۰۰۰۰۰
کسی طاقتور کی بات سہہ جانا کمال نہیں۰۰۰۰دراصل کسی کمزور کی غلط بات کو سہہ جانا۰۰۰۰۰۰دلیل ہوتے ہوئے بھی چپ رہنا اور محبتوں کو قائم و دائم رکھنا ہی اصل برداشت ہے۰۰۰۰۰
(ابنِ آدم)

This entry was posted in برداشت ایک طلسماتی طاقت. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s