Category Archives: حاصلِ زیست

حاصلِ زیست

اُس نے دھواں اُڑاتی کافی کا ایک گہرا سِپ لیا اور اپنے خوبصورت ہونٹوں پر زبان پھیرتے ہوئے مجھے مُسکرا کر دیکھا۰۰۰میں نے بھی جواباً اپنے ہونٹوں کو پھیلا کر اسُکی حسین مُسکراہٹ کا خندہ پیشانی سے خیر مقدم کیا۔ … Continue reading

Posted in Uncategorized, حاصلِ زیست | 2 Comments